Salman Khan BlackBuckPoachingCase Next date of hearing is July 17

Salman khan black buck poching case

کالے ہرن شکار معاملہ میں سلمان کی عرضی پر آئندہ سماعت 17 جولائی کو


بالی ووڈ اداکار سلمان خان کو کالا ہرن شکار کے معاملے میں سنائی گئی 5 سال کی سزا کے خلاف جودھپور کے سیشن کورٹ میں سماعت ہوئی جس میں عدالت نے آئندہ سماعت کے لیے 17 جولائی کی تاریخ طے کی ہے۔

5 اپریل کو اس معاملے میں اس وقت کے جودھپور ضلع چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ دیو کمار کھتری نے سلمان خان کو قصوروار قرار دیا تھا۔ سزا سنائے جانے کے بعد سلمان خان کو حراست میں لے کر جیل بھیج دیا گیا تھا۔ وہ 7 اپریل تک جیل میں رہے تھے۔ 7 اپریل کو سیشن کورٹ نے سلمان کو سنائی گئی 5 سال کی سزا پر روک لگاتے ہوئے انھیں شرط کے ساتھ ضمانت دے دی تھی۔ جب کہ اس معاملے میں ان کے ساتھی فلم اداکار سیف علی خان، اداکارہ نیلم، سونالی بیندرے اور تبو کو شبہ کا فائدہ دیتے ہوئے بری کر دیا گیا تھا۔

ماعت کے دوران عدالت میں موجود ہونے کے لیے سلمان خان 6 مئی کو جودھپور پہنچے تھے۔ ممبئی سے جودھپور پہنچے سلمان کے ساتھ ان کی بہن الویرا، مہاراشٹر کے سابق ممبر اسمبلی بابا صدیقی اور باڈی گارڈ شیرا بھی آئے تھے۔
یہ معاملہ 1998 کا ہے جب سلمان خان فلم ’ہم ساتھ ساتھ ہیں‘ کی شوٹنگ کے لیے جودھپور میں تھے۔ یہاں ان کے ساتھ سیف علی خان، تبو، سونالی بیندرے اور نیلم بھی تھیں۔ سلمان سمیت ان چاروں پر الزام تھا کہ انھوں نے یکم اکتوبر 1998 کو جودھپور کے نزدیک کانکانی گاؤں میں دو کالے ہرنوں کا شکار کیا تھا۔ اس سلسلے میں آرمس ایکٹ سمیت سلمان خان پر کل چار کیس درج ہوئے تھے اور تین معاملوں میں سلمان خان بری ہو چکے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.