Elections Should Be On Time -Chief Justice Remarks

Election comission pakistan

انتخابات وقت پر ہونے چاہئیں،چیف جسٹس کی الیکشن کمیشن کو ہدایت


اسلام آباد : سپریم کورٹ نے اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ کو الیکشن کمیشن کی جانب سے سرکاری اداروں میں بھرتیوں پرپابندی کی درخواستیں ایک ہفتے میں نمٹانے کی ہدایت کر دی،چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ الیکشن میں تاخیر نہیں ہونی چاہیے اور آئندہ انتخابات اپنے وقت پر ہونے چاہیں۔ واضح رہے کہ چیف جسٹس ثاقب نثار گزشتہ روز الیکشن کمیشن کی جانب سرکاری اداروں میں بھرتیوں پر پابندی عائد کرنے کے حکم پر ازخود نوٹس لیا تھا، ای سی پی کی جانب سے 11 اپریل کو پابندی کا نوٹس جاری کیا گیا تھا۔

سپریم کورٹ میں چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں تین رکنی بینچ (چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار،جسٹس عمر عطا بندیال اور جسٹس اعجازالاحسن ) نے الیکشن کمیشن کی طرف سےسرکاری اداروں میں بھرتیوں پرپابندی کے کیس کی سماعت کی، جس میں سیکریٹری الیکشن کمیشن عدالت میں پیش ہوئے۔

سیکریٹری الیکشن کمیشن نے عدالت کو بتایا کہ الیکشن کمیشن نے پری پول دھاندلی روکنے کے لیے بھرتیوں پر پابندی لگائی، وفاقی اور صوبائی پبلک سروس کمیشن کے تحت بھرتیوں پر پابندی نہیں لگائی، حلقے میں ترقیاتی کاموں کے لیے بھی رقم مختص کرنے پرپابندی لگائی گئی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.