اسلام آباد (ویب ڈیسک ) ایک غیر ملکی رپورٹ کے مطابق پاکستان اور بھارت نے آپس کی حالیہ کشیدگی کے دوران ایک دوسرے کو میزائل حملوں کی دھمکیاں بھی دے دی تھیں ۔ ان دونوں حریف ہمسائیہ جوہری طاقتوں کے مابین ایک نئی جنگ کا بھرپور خطرہ امریکہ کی مداخلت کے بعد ٹلا ۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کی اسلام آباد اور نئی دہلی سے ملنے والی رپوٹس کے مطابق گزشتہ ماہ پاکستان اور بھارت کے مابین سیاسی اور عسکری تناؤ اتنا زیادہ ہو گیا تھا کہ یہ دونوں ممالک ایک نئی جنگ کے دہانے پر پہنچ گئے ۔اس دوران انہوں نے ایک دوسرے کو میزائل حملوں کی دھمکیاں بھی دے دی تھیں لیکن اس خطرے کے بروقت ٹل جانے میں دیگر ممالک کے نمائندوں کے علاوہ اعلیٰ امریکی حکام نے بھی کلیدی کردار ادا کیا تھا ،جن میں صدر ڈونلڈٹرمپ کے قومی سلامتی مشیر جان بولٹن بھی شامل تھے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے نے ذرائع کے حوالے سے لکھا ہے کہ نئی دہلی نے اہداف کی تخصیص کیے بغیر کہہ دیا تھا کہ وہ بھارت کو ایسے ممکنہ حملوں کا جواب اپنے میزائلوں کے تین گنا حملوں کے ساتھ دے گا ۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے نے لکھا ہے کہ جس طرح پاکستان اور بھارت کے مابین کشیدگی نے دونوں اٹیمی طاقتوں کے مابین ایک نئی جنگ کا شیدید خطرہ پیدا کر دیا تھا،وہ اس بات کا ثبوت ہے کہ مسئلہ کشمیر آج بھی دنیا کے سب سے خطرناک تنازعات میں سے ایک ہے ۔
پاکستان نے اپنی سرزمین پر گرفتار بھارتی پائلٹ کو امریکہ کے مبینہ دباؤ پر واپس بھارت کے حوالے کر دیا تھا ۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے نے لکھا ہے کہ ان ممالک کے مابین اس تناؤ کا خاص پہلو یہ بھی تھا کہ اس دوران جن میزائلوں کے دو طرفہ استعمال کی دھمکیاں دی گئی تھیں ،وہ روایتی ہتھیاروں سے زیادہ کچھ نہیں تھے ۔ پھر بھی اس صورت حال پر واشنگٹن ،بیجنگ اور لندن تک میں بہت تشویش پائی جانے لگی تھی ۔ نئی دہلی اور اسلام آباد کے مابین اس تقریبا جنگی صورت حال میں کمی کے لیےامریکی کوششوں نے بھی کلیدی کردار ادا کیا ۔ اس دوران امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اجیت دووال ،بھارتی وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی سے بھی ٹیلی فون پر گفتگو کی تھی ۔ اس تناؤ میں کمی کے لے صدر ڈونلڈٹرمپ کے قومی سلامتی مشیر جان بولٹن بھی بہت سرگرم رہے تھے ۔ جو نئی دہلی اور اسلام آباد میں اعلیٰ شخصیات کے ساتھ بار بار رابطے کر رہے تھے ۔ اسی دوران پاکستان کے ایک وزیر کے بقول اس کھچاؤ میں کمی کے لئے چین اور متحدہ عرف امارات نے بھی اپنے اپنے طور پر بھرپور کوشیشں کی تھیں ۔بات چیت کے دوران امریکہ کی کوشیش پاکستان میں موجود بھارتی پائلٹ کی رہائی پر مرکوز تھیں۔ امریکہ بھارت سے یقین دہانی میں کامیاب رہا کہ وہ اپنے حملے کے ارادے سے پیچھے ہٹ جائے ۔
The post ہم پاکستان پر 6 میزائل فائر کریں گے ۔۔۔۔ بھارت کی اس دھمکی کا کس نے اور کیا منہ توڑ جواب دیا تھا ؟ کشیدگی دراصل کس نے ٹالی ؟ امریکی ادارے کی رپورٹ میں تہلکہ خیز انکشافات appeared first on Urdu News.