کشمیر کمیٹی کی سربراہی اب تحریک انصاف کی کس خاتون رہنما کو دی جائیگی؟ جان کر مولانا فضل الرحمان بھی سر پکڑ لیں گے

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمران خان قومی اسمبلی میں کشمیر کی خصوصی کمیٹی کی سربراہی وفاقی وزیر شیریں مزاری جبکہ وزارت امور کشمیر و گلگت بلتستان امین گنڈا پور کودینے پر غور کر رہے ہیں اس کیلئے انہوں نے سینئر قیادت سے مشورہ کیاہے۔روزنامہ دنیا کے مطابق قومی اسمبلی میں کشمیر کمیٹی کی چیئرمین شپ وفاقی وزیر شیریں مزاری کو دینے بارے تحریک انصاف میں مشاورت کی گئی ہے ۔
، اس صورت میں شیریں مزاری کے پاس دو عہدے بیک وقت ہوں گے وہ وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق اور کشمیر کمیٹی کی چیئرپرسن بھی ہوں گی۔ اخباری ذرائع کے مطابق امین گنڈا پور کو وفاقی وزیر بنانے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے ، قوی امکان ہے کہ وزارت امور کشمیر وگلگت بلتستان کا قلمدان انہیں دیا جائے گا، بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کیلئے ملائیکہ بخاری ۔
، میاں فرخ حبیب اور دیگر نام زیر غور ہیں، وزیراعظم عمران خان نے وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کو مکمل اختیار دیا ہے کہ وہ اپنی پسند پر بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کا سربراہ مقرر کریں۔وزیراعظم عمران خان اور تحریک انصاف نے سابق امیدوار این اے 131حافظ فرحت کو ضمنی انتخابات میں پارٹی امیدوار ہمایوں اختر کوکامیاب کرانے کا ٹاسک دیا ہے ، نوجوان رہنما حافظ فرحت کو مرکزمیں اہم حکومتی ذمہ داری دیئے جانے کا بھی امکان ہے ، ضمنی انتخابات کے بعد انہیں کوئی سرکاری ذمہ داری سونپی جائے گی۔
The post کشمیر کمیٹی کی سربراہی اب تحریک انصاف کی کس خاتون رہنما کو دی جائیگی؟ جان کر مولانا فضل الرحمان بھی سر پکڑ لیں گے appeared first on Urdu News.