پی آئی اے کے طیاروںپر قومی پرچم کی بجائے مارخور کا نشان۔۔؟؟سپریم کورٹ نے فوری حکم جاری کر دیا

اسلام آباد(نیوزڈیسک)سپریم کورٹ نے پی آئی اے کے طیاروں پر قومی پرچم کی جگہ مارخود کی تصویر لگانے پر پابندی عائدکردی چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے ہیں کہ آئندہ کسی طیارے سے قومی پرچم نہیں ہٹایا جائے گااگر کسی طیارے سے قومی پرچم ہٹایا گیا تو حکم عدولی سمجھا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں بنچ نے پی آئی اے کے اثاثوں سے متعلق کیس کی سماعت کی ،عدالت نے سی ای او مشرف رسول کی تعیناتی درخواست کابینہ ڈویژن کے حوالے کردی ،چیف جسٹس نے کہا کہ یہ حکومتی صوابدید ہے۔سپریم کورٹ نے پی آئی اے کے 10 سال کے دوران سربراہاں کے نام ای سی ایل نکالنے کی مشروط اجازت دے دی۔چیف جسٹس نے مشرف رسول سے مکالمہ کرتے ہوئے کہاکہ آپ کوملک سے زیادہ بیرون ملک کاروبار عزیز ہے ،اپنے کاروبار کو وسعت دیتے رہے اور پی آئی اے کو تباہ کردیا۔چیف جسٹس نے آڈیٹر جنرل کو 10 ہفتے میں آڈٹ مکمل کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹر فرخ سلیم واپس آجائیں گے اور شراکت دار بھی رائے دیں ،چیف جسٹس نے کہا کہ ٹی او آرز جامع ہیں تاہم ان میں ترمیم کی جا سکتی ہے ۔