ڈاکو گرفتار

کراچی، پاکستان کسٹم پریونٹو کے امیجیٹ کلیرنس گروپ ایر فریٹ یونٹ پر تعینات عملے نے بیرون ملک سے برآمد لاکھوں روپے مالیت کی اشیاء کو مس ڈکلیرشن کے ذریعہ کلیئر کرنیکی کوشش ناکام بنادی جبکہ تین افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔

ڈپٹی کلکٹر کراچی ثناء اللہ ابڑونے کسٹم ہاؤس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ یہ پاکستان کی تاریخ کا ای کامرس فراڈ کا پہلا کیس ہے، یہ اپنے خریداروں کو بیرون ملک خریداری کی سہولت فراہم کرتی تھی،مس ڈکلیریشن کی کاسمیٹکس فوڈآئیٹمز اور دیگر آئیٹمز جن پر ڈیوٹی لگتی ہے انہیں کاغذ ظاہر کر کے لایا جا رہا تھا۔

ثناء اللہ ابڑوکا کہنا تھا کہ دو سے تین ماہ میں 27 کنسائنمنٹس کلیر کرائی گئی ہیں،قومی خزانے کو پانچ کروڑ روپے سے زائد کا نقصان پہنچایا ہے،کاروائی 19 مئی کو کراچی ایئرپورٹ پر کی گئی،کمپنی کے مالک سمیت تین لوگ گرفتار کر لیے،ڈپٹی کلکٹر کراچی نے کہا کہ ڈارلنگٹن پوسٹل کمپنی کا یہ سامان امارات ایئرلائن کی پرواز کے ذریعے امریکہ سے کراچی پہنچا تھا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.