پاکستان نے برطانوی وزیر داخلہ سے ایون فیلڈ اپارٹمنٹس اور اسحاق ڈار کی واپسی کی درخواست کی تو برطانوی وزیر نے پاکستان کو دوٹوک طور پر کیا جواب دیدیا؟

اسلام آباد (نیوزڈیسک) برطانوی وزیر داخلہ نے وزیراعظم عمران خان اور دیگر سیاسی رہنماؤں سے ملاقات کی۔ اس ملاقات کی اندرونی کہانی بھی سامنے آ گئی ہے۔ ان ملاقاتوں میں پاکستانی قیادت سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی واپسی اور ایون فیلڈ پراپرٹیز پر بات کرتی رہی لیکن برطانوی وزیر داخلہ نے انفرادی کیسز پر بات کرنے سے معذرت کر لی۔ برطانوی وزیر داخلہ ساجد جاوید نے کہا کہ برطانوی قانون کسی وزیر کو انفرادی مقدمے پر بات کرنے کی اجازت نہیں دیتا۔ انہوں نے کہا کہ برطانیہ کے مقدمات کے لیے ادارے آزاد ہیں۔ ملاقات میں دونوں ممالک میں انصاف اور احتساب کے شعبے میں شراکت داری کی تجویز بھی برطانوی وزیرداخلہ ساجد جاوید نے دی۔
اور کہا کہ دونوں ممالک کے مابین جلد از جلد جو معاہدہ ہو سکتا ہے وہ ملزموں اور اثاثہ جات کی حوالگی کا ہے۔انہوں نے یقین دہانی کروائی کہ دونوں ممالک کے مابین ملزموں ، اثاثہ جات کی حوالگی اور منی لانڈرنگ کی روک تھام کے لیے اقدامات کیے جائیں گے۔ یاد رہے کہ برطانوی وزیر داخلہ ساجد جاوید پاکستان کے دورے ہیں۔برطانوی وزیر داخلہ ساجد جاوید کے دورۂ اسلام آباد کے موقع پر پاکستان اور برطانیہ کے درمیان قانون اور احتساب سے متعلق ایک معاہدہ کیا گیا ہے جس کا مقصد مختلف جرائم کے خاتمے کے لیے معاونت کرنا ہے۔برطانوی وزیر داخلہ ساجد جاوید نے وزیراعظم عمران خان،، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور وزیر قانون فروغ نسیم سے ملاقات کی۔
برطانوی وزیر داخلہ ساجد جاوید کے دورہ پاکستان کے دوران پاکستان اور برطانیہ کے درمیان قانون اور احتساب سے متعلق ایک معاہدہ بھی کیا گیا جس کا مقصد مختلف جرائم کے خاتمے کے لیے معاونت کرنا ہے۔اس حوالے سے وزیراعظم کے مشیر برائے اسٹیبلشمنٹ شہزاد اکبر نے کہا کہ معاہدے کا مقصد لوٹی ہوئی دولت واپس لانا ہے اور ملزمان کے تبادلے کے معاہدے کی تجدید کریں گے۔ملاقات کے بعد وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم اور ساجد جاوید نے مشترکہ نیوز کانفرنس بھی کی جس میں دونوں ممالک کے مابین ہونے والے معاہدوں سے آگاہ کیا گیا۔
The post پاکستان نے برطانوی وزیر داخلہ سے ایون فیلڈ اپارٹمنٹس اور اسحاق ڈار کی واپسی کی درخواست کی تو برطانوی وزیر نے پاکستان کو دوٹوک طور پر کیا جواب دیدیا؟ appeared first on Urdu News.