کابل (نیوزڈیسک) وزیر خارجہ اپنے پہلے غیر ملکی دورے میں ہی اپنا وعدہ بھول گئے، وزارت خارجہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد شاہ محمود قریشی نے اعلان کیا تھا کہ وہ بزنس کلاس کا ہوائی سفر نہیں کریں گے، تاہم ہفتہ کے روز خصوصی طیارے کے ذریعے کابل پہنچے۔ تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے پہلے ہی سرکاری غیر ملکی دورے میں اپنا کیا ہوا وعدہ توڑ دیا ہے۔وزارت خارجہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد شاہ محمود قریشی نے اعلان کیا تھا کہ وہ وزیراعظم عمران خان کی سادگی مہم کے تحت خود بھی سادگی اختیار کریں گے۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اعلان کیا تھا کہ سادگی مہم کے سلسلے میں وہ حکومت کا حصہ ہوتے ہوئے کبھی بھی بزنس کلاس کا ہوائی سفر نہیں کریں گے۔
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے عام اکانومی کلاس کا ہوائی سفر کرنے کا اعلان کیا تھا۔تاہم ہفتے کے روز وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے پہلے سرکاری غیر ملکی دورے کے سلسلے میں اسلام آباد سے افغانستان کیلئے روانہ ہوتے ہوئے اپنے اس وعدے کو توڑ دیا۔ پاکستان سے روزانہ معمول کی پرواز اسلام آباد سے صبع گیارہ بجے کابل جاتی ہے اور تین بجے کابل سے واپس اسلام آباد آتی ہے۔ تاہم وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اس پرواز کے ذریعے کابل جانے کی بجائے ۔
خصوصی طیارے سے کابل جانے کا فیصلہ کیا۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اپنے خصوصی وفد کے ہمراہ خصوصی طیارے کے ذریعے کابل پہنچے۔ یوں وزیر خارجہ کے اس خصوصی سفر کے باعث قومی خزانے پر کروڑوں روپے کا بوجھ پڑا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی افغان اعلی قیادت سے ملاقاتیں کرنے کے بعد خصوصی طیارے سے ہی پاکستان واپس آئیں گے۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کابل میں افغان صدر اشرف غنی اور افغان چیف ایگزیکٹیو عبد اللہ عبد اللہ سے ملاقاتیں کریں گے۔
The post وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے وزیراعظم عمران خان کو پوری قوم کے سامنے شرمندہ کروا دیا، اعلانات کی دھجیاں اڑا دیں appeared first on Urdu News.