لاہور: لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیراعظم ناصر الملک کے دورہ سوات پراٹھنے والے اخراجات کی واپسی کے لئے درخواست پر وفاقی حکومت سے جواب طلب کر لیا۔لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس مامون رشید شیخ نے کیس کی سماعت کی، درخواست گزار بیرسٹر جاوید اقبال جعفری نے موقف اختیار کیا ہے کہ نگراں وزیراعظم نے ذاتی امور کے لئے اپنے آبائی علاقے سوات میں 22گاڑیوں کے کانوائے اور پروٹوکول کو استعمال کر کے قومی خزانے کو نقصان پہنچایا ہے۔درخواست گزار نے استدعا کی کہ عدالت معاملے کا نوٹس لے اور اس پر اٹھنے والے اخراجات واپس لینے کا حکم دے۔۔۔۔