دل جلے عاشق نے واٹس ایپ ویڈیو کال پر محبوبہ کے سامنے گلے میں پھندا ڈال کر زندگی کا خاتمہ کرلیا۔قومی اخبار کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ڈراموں اور فلموں کے کرداروں سے متاثر عشق کے فتور میں مبتلا عاشق نے اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔ناراض محبوبہ کے نہ ماننے پر 18 سالہ نوجوان نے واٹس اپ پر ویڈیو کال کرکے اس کے سامنے گلے میں پھندا ڈال لیا اور خود کشی کر لی۔ بتایا گیا ہے کہ ریٹالہ خورد کے رہائشی عبدالحفیظ کا 18 سالہ بیٹا سہیل لاہور میں اپنے ماموں کے ساتھ ایبٹ آباد روڈ پر واقع پلازہ کے ایک کمرے میں رہتا تھا۔سہیل نے اپنی محبوبہ کو موبائل فون پر ویڈیو کال کی اس کے سامنے گلے میں کپڑے کا پھندا ڈال کر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔
واضح رہے اس سے قبل بھی اس طرح کے کئی واقعات سامنے آتے رہتے ہیں۔ ایک میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ محبت میں ناکامی اور محبوبہ کی شادی طے ہونے پر فیصل آباد کے رہائشی عاشق اللہ دتہ نے 20 سالہ انعم کو گولی مار کر زخمی کر دیا اور خود کو بھی گولی مار کر خودکشی کرنے کی کوشش کی۔ 20 سالہ انعم کی شادی طے ہونے پر اس کا محبوب اللہ دتہ لڑکی کے گھر پہنچ گیا اور فائرنگ کر کے لڑکی کو زخمی کر دیا اور بعد میں خود کو بھی گولی مار لی۔ اسی طرح بھارتی شہر کلکتہ میں محبوبہ کے بھاگنے سے انکار پر عاشق نے خود کشی کر لی تھی۔اٹھارہ سالہ سر بجیت اپنے پڑوس میں رہنے والی لڑکی کی محبت میں مبتلا ہو گیا تھا اور اس سے پیار کی پینگیں بڑھانے لگا یہان تک کے محبت کی شدت بڑھنے پر سربجیت نے اپنی پڑوسن کو گھر سے بھاگنے کی صلاح دی جس پر پڑوسن نے یکسر انکار کر دیا ۔ سربجیت اس بات پر دلبرداشتہ ہو گیا اور اس نے اپنے کمرے میں خود کو پھندے سے لٹکا کر خود کشی کر لی ۔لڑکے کے گھر والوں کو معلوم ہوا تو انہوں نے ہنگامہ برپا کر دیا اور لڑکی کو تشدد کا نشانہ بنایا ۔ دل جلے عاشق نے واٹس ایپ ویڈیو کال پر محبوبہ کے سامنے گلے میں پھندا ڈال کر زندگی کا خاتمہ کرلیا۔قومی اخبار کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ڈراموں اور فلموں کے کرداروں سے متاثر عشق کے فتور میں مبتلا عاشق نے اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔ناراض محبوبہ کے نہ ماننے پر 18 سالہ نوجوان نے واٹس اپ پر ویڈیو کال کرکے اس کے سامنے گلے میں پھندا ڈال لیا اور خود کشی کر لی۔ بتایا گیا ہے کہ ریٹالہ خورد کے رہائشی عبدالحفیظ کا 18 سالہ بیٹا سہیل لاہور میں اپنے ماموں کے ساتھ ایبٹ آباد روڈ پر واقع پلازہ کے ایک کمرے میں رہتا تھا۔سہیل نے اپنی محبوبہ کو موبائل فون پر ویڈیو کال کی اس کے سامنے گلے میں کپڑے کا پھندا ڈال کر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔واضح رہے اس سے قبل بھی اس طرح کے کئی واقعات سامنے آتے رہتے ہیں۔
ایک میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ محبت میں ناکامی اور محبوبہ کی شادی طے ہونے پر فیصل آباد کے رہائشی عاشق اللہ دتہ نے 20 سالہ انعم کو گولی مار کر زخمی کر دیا اور خود کو بھی گولی مار کر خودکشی کرنے کی کوشش کی۔ 20 سالہ انعم کی شادی طے ہونے پر اس کا محبوب اللہ دتہ لڑکی کے گھر پہنچ گیا اور فائرنگ کر کے لڑکی کو زخمی کر دیا اور بعد میں خود کو بھی گولی مار لی۔ اسی طرح بھارتی شہر کلکتہ میں محبوبہ کے بھاگنے سے انکار پر عاشق نے خود کشی کر لی تھی۔اٹھارہ سالہ سر بجیت اپنے پڑوس میں رہنے والی لڑکی کی محبت میں مبتلا ہو گیا تھا اور اس سے پیار کی پینگیں بڑھانے لگا یہان تک کے محبت کی شدت بڑھنے پر سربجیت نے اپنی پڑوسن کو گھر سے بھاگنے کی صلاح دی جس پر پڑوسن نے یکسر انکار کر دیا ۔ سربجیت اس بات پر دلبرداشتہ ہو گیا اور اس نے اپنے کمرے میں خود کو پھندے سے لٹکا کر خود کشی کر لی ۔لڑکے کے گھر والوں کو معلوم ہوا تو انہوں نے ہنگامہ برپا کر دیا اور لڑکی کو تشدد کا نشانہ بنایا ۔
The post لاہور میں محبوبہ کے راضی نہ ہونے پر عاشق کا خوفناک اقدام!!ویڈیو کال پر اپنی محبوبہ کے سامنے ہی کیا کام کر ڈالا ، جانیں appeared first on Urdu News.