رکن اسمبلی کے بھانجے کے قاتل کوعدالت میں پیشی کے دوران قتل کردیاگیا

لاہور(ویب ڈیسک )صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور کی ضلع کچہری میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں قتل کے زیر حراست ملزم اسلم عرف اچھو ہلاک ہوگیا۔پولیس کے مطابق ملزم کو عدالت میں پیشی کے بعد واپس لے جایا جا رہا تھا کہ نامعلوم افراد نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں ملزم موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا۔بعد ازاں سیشن ججلاہور عابد حسین قریشی اور رجسٹرار نے ضلع کچہری میں فائرنگ کے واقعے کا نوٹس لیا اور پولیس حکام سے عدالت کی ناقص سیکیورٹی پر فوری رپورٹ طلب کرلی۔سیشن جج کا کہنا تھا کہ ذمہ داروں کو فوری طور گرفتار کیا جائے اور بتایا جائے کہ فائرنگ کا واقعہ کیوں اور کیسے پیش آیا۔خیال رہے کہ لاہور کی ضلع کچہری میں فائرنگ سے ہلاک ہونے والے ملزم پر ایم این اے سیف الملوک کھوکھر کے بھانجے کے قتل کا الزام تھا۔یاد رہے کہ یہ پہلا واقعہ نہیں کہ عدالت میں ملزمان کی جانب سے فائرنگ کی گئی، اس سے قبل

بھی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ میں فائرنگ کے مختلف واقعات رونما ہوچکے ہیں۔مختلف شہروں کی عدالتوں میں سیکیورٹی میں غفلت یا دیگر وجوہات کی بنا پر فائرنگ کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے اور مجموعی طور پر لاہور میں 2011 سے اب تک 10 افراد کو مختلف عدالتوں میں فائرنگ کرکے ہلاک کیا جاچکا ہے۔رواں سال 31 جنوری کو سیشن کورٹ لاہور میں فائرنگ سے کانسٹیبل آصف اور زیر حراست ملزم ملک امجد ہلاک ہوئے تھے، 20 فروری کو 2 وکلاء کو کمرہ عدالت کے باہر قتل کر دیا گیا تھا۔اس سے قبل ڈیرہ غازی خان میں بھی اسی طرح کا ایک واقعہ پیش آیا تھا، جب پیشی کے بعد واپس جانے والے افراد پر مخالفین کی جانب سے فائرنگ کردی گئی جس کے نتیجے میں 3 افراد جاں بحق ہوگئے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.