اسلام آباد (نیوزڈیسک) پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان کی دوسری سابقہ اہلیہ ریحام خان کی کتاب نے لانچ ہونے سے قبل ہی ایک طوفان برپا کر دیا ہے۔ ریحام خان نے اپنی کتاب میں اپنی آپ بیتی کے ساتھ ساتھ عمران خان اور ان کے قریبی ساتھیوں سے متعلق کچھ گھناؤنے دعوے کیے ہیں جس پر ریحام خان کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ریحام خان کی کتاب میںموجود مواد پر مشتمل صفحہ صفحات کے نمبرز کےساتھ پہلے ہی منظر عام پر آ چکا ہے لیکن اب ریحام خان کی کتاب کا پہلا باب بھی منظر عام پر آگیا ہے۔ ریحام خان نے اپنی کتاب کے پہلے باب کا نام ”ڈی ڈور” رکھا ہے۔ اس باب میں ریحام خان نے تحریر کیا کہ دروازہ زور سے کھُلا،وہ شخص اندر داخل ہوا۔ اس نے مجھے اور میری بیٹی کو سفید چادر میں لیٹا دیکھا، ۔

اس ظالم شخص کےلمبے چہرے پر ہونٹ غصے میں سختی سے بند تھے،اس نے چادر ہٹا دی اور مجھے کلائیوں سے پکڑ کر دروازے کی طرف گھسیٹا،میں گھٹنوں کے بل فرش پر گر گئی،میری بچی خوف سے چیخی، میں کھڑی ہو گئی جس پر اس شخص نے مجھے گالیاں دیں۔بہر حال آج بڑی تبدیلی آ چکی تھی،اس رات کے بعد اب میں بالکل خوفزدہ نہیں تھی۔

نجی ٹی وی چینل کے پروگرام اینکرنے یہ سب پڑھ کر بتایا اور کہا کہ ریحام خان نے اپنی کتاب کا آغاز اس طرح کیا ہے اور یہ غالباً ان کی پہلی شادی سے ہی متعلق لکھا گیا ہے۔ ریحام خان نے اپنی کتاب میں لکھا ہے کہ ان کے پہلے شوہر ڈاکٹر اعجاز رحمان کیسے ان کو مارا پیٹا کرتے تھے اور ان پر تشدد کرتے تھے۔پہلے شوہر کے تشدد سے متعلق ریحام خان کئی بار تذکرہ کر چکی ہیں، لیکن ڈاکٹر اعجاز رحمان نے اس بات کی تردید کی اور کہا کہ یہ سب بے بنیاد اور جھوٹ ہے۔

واضح رہے کہ ریحام خان نے اپنی کتاب میں اپنی دونوں شادیوں اور ان دونوں شادیوں کی ناکامی کی وجوہات کا بھی تذکرہ کیا ہے۔ ریحام خان کی یہ کتاب مارکیٹ میں آنے سے قبل ہی متنازعہ ہو چکی ہے، ریحام خان کی کتاب میں عمران خان اور ان کے قریبی ساتھیوں پر عائد کیے جانے والے گھناؤنے الزامات کی وجہ سے ان کو گذشتہ روز قانونی نوٹس بھی بھجوایا گیا۔