اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)بھارتی دانشوروں نے موجودہ صورتحال میں پاکستان کو کامیاب قرار دے دیا ہے۔ تعلیم یافتہ بھارتی طبقہ حقیقت پسندانہ رویہ اپناتے ہوئے پاکستان کے خلاف جارحیت اپناتے ہوئے بھارت کی عالمی سطح پر بد ترین ناکامی اور اکیلے پن کا اعتراف کرتے ہوئے پاکستان کی تحمل مزاجی اور کامیابی کا بھی معترف ہو گیا ہے۔ اشوکا یونیورسٹیکے وائس چانسلر پرتاب مہتا نے ایک اخبار میں اپنے کالم میں لکھا ہے کہ پلوامہ حملے کے بعد بھارتی رد عمل خود بھارت کے لیے نقصان دہ ہے۔پاکستان کا تحمل اور برداشت عالمی سطح پر اسے مزید معتبر کررہا ہے۔حقیقت یہ ہے کہ پاکستان کے خلاف جنگ میں بھارت تنہا ہے۔پوری عالمی برادری میں کوئی بھی بھارت کا موقف سننے کو تیار نہیں۔عالمی برادری بھارتی رویے کو اشتعال انگیزی کے طور پر لے رہی ہے۔
پاکستان کے خلاف جارحانہ رویہ قدرتی مگر بغیر ٹھوس ثبوت کے بلا جواز ہے۔بھارت کی توجہ مسائل کے حل کی بجائے الزام تراشیوں پر مرکوز ہے۔بھارتی دانشور کا مزید کہنا ہے کہ بھارتی واویلا اس بات کا قومی ثبوت ہے کہ پاکستان جنگ جیت گیا۔انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ سمیت کئی بڑی قوتیں دہشت گردی سے محفوظ نہیں ہیں۔جب کہ کشمیر سے متعلق تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر کی جدوجہد خوفناک حد تک حقیقی اور بھرپور ہے۔گذشتہ پانچ سالوں میں کشمیر میں بھارت کے خلاف جنگ بہت زیادہ بڑھی ہے۔بھارتی پالیسیوں سے کشمیر کا مسئلہ مزید بگڑا ہے۔مسائل کا حل جنگ سے نہیں امن سے ہی ممکن ہے۔حقیقت تو یہ ہے کہ اس جنگ میں بھارت تنہا ہے۔بھارتی دانشور نے مزید کہا کہ ہماری انٹیلی جنس ، ٹیکنالوجی،اور خفیہ آپریشن کی صلاحیت ادھوری ہے۔بھارت نے 1971ء میں ایک کامیاب سازش تو کر لی لیکن امن تباہ کر دیا۔
The post بھارت کی اہم شخصیات نے موجودہ جنگ میں پاکستان کو کامیاب قرار دے دیا appeared first on Urdu News.