بنی گالہ تعمیرات کیس: چیف جسٹس ثاقب نثار نے وزیراعظم عمران خان کو بھی نہیں چھوڑا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) سپریم کورٹ میں بنی گالہ تعمیرات کیس کی سماعت ہوئی. جس کے دوران چیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان کیس میں درخواست گزار ہیں.
تفصیلات کے مطابق دوران سماعت ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا کہ بوٹینیکل گارڈن کے تحفظ کیلئے چار دیواری کی تعمیر ہونا ضروری ہے. چار دیواری کی تعمیر کا پہلا حصہ نومبر 2018 تک مکمل ہوگا.
جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ بوٹینیکل گارڈن کے زیر التوا مقدمات کا ریکارڈ منگوا لیتے ہیں.
ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ 12 کلو میٹر دیوار کہی گئی تھی، 4 کلومیٹر بنالی گئی ہے. 15 ملین 4 کلومیٹر پر ملے تھے، 88 ملین اگلے 4 کلومیٹر تعمیر کرنے کا مانگا ہے.
جس پر جسٹس اعجاز الاحسن نے پوچھا کہ پہلے آپ نے 4 کلومیٹر کا 15 ملین لیا، اب 88 کیوں؟ عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ بتایا گیا فروری 2019 تک گارڈن کے چار دیواری کا کام مکمل ہوجائے گا.
ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو یقین دلایا کہ کام فروری 2019 تک مکمل کرلیا جائے گا.
عدالت نے تمام فریقین کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے بوٹینیکل گارڈن بنی گالہ میں تجاوزات سے متعلق مقدمات کا تمام ریکارڈ طلب کرلیا.
The post بنی گالہ تعمیرات کیس: چیف جسٹس ثاقب نثار نے وزیراعظم عمران خان کو بھی نہیں چھوڑا appeared first on Urdu News.