پشاور (ویب ڈیسک) صوبہ خیبرپختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں معمولی تنازع پر ہونے والی فائرنگ سے 3 افراد جاں بحق جبکہ 2 زخمی ہوگئے۔ فائرنگ کا یہ واقعہ پشاور کے علاقے نوتھیہ میں پیش آیا، جس میں یونین کونسل نوتھیہ کے نائب ناظم شیر علی بھی جاں بحق ہوئے۔ پولیس کے مطابق ایک تقریب کے دوران شیر علی اور ان کے پڑوسی طارق کے درمیان آتشبازی کے معاملے پر معمولی تکرار ہوئی تھی، تاہم اس دوران سخت جملوں کے تبادلے سے معاملہ بگڑ گیا۔
پولیس کا کہنا تھا کہ سخت جملوں کے تبادلے کے بعد دونوں فریقین کی جانب سے فائرنگ کا تبادلہ ہوا، جس میں یوسی نائب ناظم شیر علی، ان کے بھائی اور پڑوسی طارق جاں بحق ہوگئے جبکہ اس دوران 2 افراد زخمی بھی ہوئے۔ دوسری جانب عوامی نیشنل پارٹی کے ضلع رکن محمد سعید ظاہر نے واقعے کی تصدیق کی ہے اور بتایا کہ اس واقعے میں 2 افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔ فائرنگ کے بعد زخمیوں اور لاشوں کو پشاور کے لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کردیا گیا جبکہ پولیس مزید تحقیقات کر رہی ہے۔ واقعے کے عینی شاہدین کے مطابق یہ واقعہ اتوار کی رات ایک بجے کے قریب پیش آیا۔
واضح رہے اے این پی کے نائب ناظم شیر علی کے گھر میں شادی کی تقریب جاری تھی جس میں اس کے دوست دعوت کے لیے مدعو تھے کہ ان کے درمیان کسی بات پر تلخ کلامی ہوئی اور انہوں نے فائرنگ کردی ۔ جاں بحق افراد میں شیر علی، اس کا بھائی طارق اور قریبی دوست شامل ہیں۔ گولیاں لگنے سے ایک راہ گیر سمیت دو افراد زخمی بھی ہوئے۔ پولیس نے لاشیں تحویل میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے بھجوادیں اور مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہیں۔
The post اہم ترین جماعت کے رہنما کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔۔۔ پارٹی سوگ میں ڈوب گئی appeared first on Urdu News.