اگر فواد چودھری پارلیمانی زبان نہیں بول رہے تو کیا پارلیمان میں بیٹھے ہوئے لوگوں نے پارلیمانی کام کئے ہیں ، فیصل واڈا

رکن قومی اسمبلی فیصل واڈا نے کہا ہے کہ حکومت سے چالیس دن کے اندر 65 سال کا حساب مانگا جا رہا ہے ، مقاصد کو حاصل کرنے کیلئے اتنے دن کافی نہیں ہیں ، ہمیں پتہ ہے کہ کہاں کرپشن کا پیسہ موجود ہے لیکن یہ دوسرے ملکوں میں پڑا ہوا ہے ، اس پیسے کو واپس لانے کیلئے وقت لگے گا ۔ ایک نجی نیوز چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے فیصل واڈا نے کہا کہ فواد چودھری اگر پارلیمانی زبان نہیں بول رہے تو کیا پارلیمان میں بیٹھے ہوئے لوگوں نے پارلیمانی کام کئے ہیں ؟ فواد چودھری کے جارحانہ رویے کی بہت سے وجوہات ہیں اس کی ایک بڑی وجہ یہ ہے کہ مشاہد اللہ خان بہت غلیظ زبان استعمال کرتے ہیں ۔
انہوں نے کہا کہ حکومت سے چالیس دن کے اندر 65 سال کا حساب مانگا جا رہا ہے ، مقاصد کو حاصل کرنے کیلئے اتنے دن کافی نہیں ہیں ۔ انہوں نے کہا ہے کہ ہمیں پتہ ہے کہ کہاں کرپشن کا پیسہ موجود ہے لیکن یہ دوسرے ملکوں میں پڑا ہوا ہے ، اس پیسے کو واپس لانے کیلئے وقت لگے گا ۔ یہ وہی ادارے ہیں جو قبضہ مافیا کے خلاف آپریشن کر رہے ہیں ، اربوں کی زمین واگزار کروالی گئی ہے اور مزید اربوں کی اراضی واگزار کروائی جارہی ہے ۔
The post اگر فواد چودھری پارلیمانی زبان نہیں بول رہے تو کیا پارلیمان میں بیٹھے ہوئے لوگوں نے پارلیمانی کام کئے ہیں ، فیصل واڈا appeared first on Urdu News.