امریکہ (نیوز ڈیسک)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا ٹویٹ کرتے ہوئے کہنا ہے کہ چینی دوستوں کو واضح کہا تھا کہ ڈیل نہ کی تو دوستوں کو بہت نقصان ہو گا،کمپنیاں چین سے نکل کر دوسرے ملکوں میں چلی جائیں گی۔چین میں خریداری بہت مہنگی ہو گی۔اچھی ڈیل تقریبا مکمل ہو رہی تھی اور آپ پیچھے ہٹ گئے۔واضح رہے امریکہ اورچین کے مابین تجارتی جنگ ایک بار پھر اچانک شدت اختیار کر گئی ہے‘صدر ڈونلڈ ٹرمپنے چینی مصنوعات پر 200 ارب ڈالر کی مالیت کے اضافی محصولات لگا نے کا اعلان کیا ہے جبکہ امریکی صدر نے چینی مصنوعات پر مزید محصولات نافذ کرنے کا عندیہ دیا ہے.
دوسری جانب تمام دھمکیوں کے باوجود امریکہ اور چین تجارتی جنگ کے خاتمے کے لیےمذاکرات کر رہے ہیں‘امریکی صدر کی طرف سے چینی اشیا پر مزید محصولات کے نفاذ کی دھمکیاس طرح کے دعووں کے بعد سامنے آئی ہے کہ چین تجارتی معاہدے سے پیچھے ہٹنے کی کوشش کر رہا ہے. امریکہ اور چین پہلے ہی ایک دوسرے پر اربوں ڈالر کی اضافی محصولات عائد کر چکے ہیں‘دنیا کی دو بڑی معیشتیں کے مابین تجارتی جنگ سے عالمی معیشت بھی متاثر ہو سکتی ہے.صدر ٹرمپ کے اقتدار میں آنے کے بعد امریکہ نے چین پرغیر منصفانہ تجارتی حربے استعمال کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے اس کے خلاف تجارتی جنگ شروع کی تھی.
امریکہ چین پر الزام لگاتا ہے کہ وہ تخلیقی جملہ حقوق کی خلاف ورزی کرتا ہے امریکہ چاہتا ہے کہ چین اپنی مقامی کمپنیوں کو غیر منصفانہ فائدہ دینے کی معاشی پالیسیاں ترک کرے.امریکہ کا چین سے مطالبہ ہے کہ وہ 419 ارب ڈالر کے تجارتی خسارے کو کم کرنے کے لیے امریکی اشیا کو خریدے.تجارتی خسارے میں کمی امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی تجارتی پالسیوں کا بنیادی جز ہے‘امریکہ نے گذشتہ سال چینی مصنوعات پر 250 ارب ڈالر کے محصولات عائد کیے ہیں چین نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے امریکی مصنوعات پر 110 ارب ڈالر کی محصولات کا نفاذ کیا ہے.
امریکہ کی طرف سے رواں برس 200 ارب ڈالر کی چینی مصنوعات پر ڈیوٹی 10 فیصد سےبڑھا کر 25 فیصد تک کیے جانے کا اعلان کیا گیا لیکن بعد میں اسے موخر کر دیا گیا.اب امریکی صدر کہہ رہے ہیں کہ یہ اضافہ آئندہ ہفتے سے نافذ المعل ہو جائے گا کیونکہ چین کے ساتھ بات چیت کا عمل بہت سست روی سے آگے بڑھ رہا ہے. اس کے علاوہ صدر ٹرمپ نے دھمکی دی ہے کہ وہ جلد ہی مزید 325 ارب ڈالر کی چینی مصنوعات پر 25 فیصد ڈیوٹی نافذ کریں گے‘جن چینی مصنوعات پر امریکہ کی طرف سے اضافی محصولات عائد کی گئی ہیں وہ بہت وسیع ہیں. پہلے مرحلے میں امریکہ نے 200 ارب ڈالر کی مالیت کی چینی مصنوعات پر دس فیصد ڈیوٹی نافذ کی۔
The post امریکہ نے چینی کمپنیوں کو اپنے ملک سے نکل جانے کا حکم دیدیا appeared first on Urdu News.