لاہور (ویب ڈیسک ) معروف صحافی عارف نظامی نے نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کے پاس اب کوئی چارہ نہیں رہا کہ وہ آئی ایم ایف کےپاس نہ جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ جو سب سے خطرناک بات لگتی ہے وہ یہ ہے کہ وزیراعظم عمران خان کو اپنے وزیر خزانہ اسدعمر پر پورایقین و اعتماد نہیں۔ اگر وہ باہر کے لوگوں کو بلا کر ان سے
رائے لے رہے ہیں اور اقتصادی مشاورتی کمیٹی کو بھی سائیڈ لائن کر دیا گیا ہے ۔ اب قسمت سے ترقی کر جانیوالے لوگ آکرمشورے دے رہے ہیں۔وزیراعظم کو عارف نقوی ایڈوائز کر رہے ہیں کہ ملک کی معیشت کیسے درست کی جائے جو اپنے ملک میں داخل نہیں ہو سکتے جہاں ان کا کاروبار ہے اور اگر وہ وہاں جائیں تو گرفتار کر لئے جائینگے۔ وہ یہاں آکر وزیراعظم ہائوس میں ہی بیٹھے رہتے ہیں۔
اور مشورے دے رہے ہیں کہ کیسے معیشت کو درست کیا جائے۔ وزیراعظم کو اب دوٹوک فیصلے کرنا ہونگے وہ سمجھتے ہیں کہ اگر انہوں نے آئی ایم ایف کے پاس نہیں جانا تو مت جائیں اور وہ سمجھتے ہیں کہ ان کے وزیر خزانہ کی کارکردگی ٹھیک نہیں جو کہ واقعی ٹھیک نظر نہیں آ رہی تو پھر وزیراعظم کو انہیں فارغ کر دینا چاہئے۔واضح رہے کہ اس سے قبل عوامی مسلم لیگ کے سربراہ اور حکومت کے اتحاد وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے تحریک انصاف کی حکومت میں غلطیوں کا اعتراف کرتے ہوئے معیشت کے حوالے سے بھی شدید خدشات اور تحفظات کا اظہار کیا ہے۔
The post اسد عمر کی چھٹی:عمران خان کو وزیر خزانہ پراعتماد نہیں ، معاشی حالت ٹھیک کرنے کیلئے کسے باہر سے بلوا لیا؟ حیران کن خبر آگئی appeared first on Urdu News.