باجوڑایجنسی (ویب ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے باجوڑ ایجنسی کا دورہ کیا ، جلسے سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ملک میں سرمایہ کاری لائیں گے، کرپشن کا خاتمہ کریں گے ، پاکستان کی تسدیر بدل کر رکھ دیں گے ، باجوڑ کو ہمیشہ نظر انداز کیا گیا ، عمران خان نے کہا کہ ملک میں جمہوریت نہیں ہے بلکہ وہاں بڑے ڈاکو بیٹھے ہیں ، آسانی سے تبدیلی نہیں آئے گی ، تھوڑا سا صبر کرنا پڑے گا ، وزیراعظم نے کہا کہ ملک کے دشمن کبھی نہیں چاہیں گے کہ قبائلی علاقے اور خیبر پی کے کا انضمام ہو ، عمران خان نے کہا کہ ہر گھر میں ایک صحت کارڈ ہوگا ، انشاء اللہ آپ کا مستقبل آگے بہت روشن ہے ، ملک کے دشمنوں کے ساتھ کسی قسم کی کوئی ڈیل نہیں ہوگی ، وزیراعظم عمران خان نے کہا جن لوگوں نےعوام کاپیسہ لوٹاان سےکسی قسم کی ڈیل نہیں ہوگی، ملک کی بہتری کیلئےمیں نریندرمودی سےبات کیلئےبھی تیارہوں، بھارت میں الیکشن ہیں آئندہ30 دن دھیان رکھنا پڑےگا،تفصیلات کے مطابق باجوڑ میں وزیراعظم عمران خان نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا شانداراستقبال پر باجوڑ کے عوام کا دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں ، 27 سال پہلے باجوڑ آیا تھا، قبائلی علاقے سے متعلق کتاب لکھی تھی، اس وقت سے باجوڑ آنے کی کوشش کررہاتھا، اس وقت حالات مشکل تھے لیکن آج جنون دیکھ پر مجھے خوشی ہوئی، وزیراعظم کا کہنا تھا دہشت گردی کےخلاف جنگ میں قبائلی علاقوں کو نقصان پہنچا اور قبائلیوں کا کاروبار، مال مویشی متاثر ہوئے، نقل مکانی کرنی پڑی، ہم سب جانتے ہیں قبائلی علاقوں نے کتنی مشکلات جھیلیں، قبائلی عوام کی آسانی کاوقت شروع ہوگیا ہے اور قبائلی عوام مشکل وقت سےنکل چکے ہیں،عمران خان نے کہا بھارت میں الیکشن ہیں وہاں کی ایک جماعت نفرتیں پھیلا کرالیکشن جیتناچاہتی ہے۔
انہوں نے واردات کی ہماری ایئرفورس نے ملک کا بہترین دفاع کیا، پاکستانی قوم امن چاہتی ہے، ہم سب ہمسائیوں سے امن چاہتےہیں، ان کا کہنا تھا کہ ہم اب آگے بڑھنا چاہتے ہیں، ہم یہاں سرمایہ کاری چاہتے ہیں جنگ نہیں، ہماری امن کی خواہش کوغلطی سے بھی کوئی کمزوری نہ سمجھے، بارہا بھارت کو کہہ رہے ہیں جنگ کے بجائے تجارت کریں، ملک کی بہتری کیلئے میں نریندرمودی سے بات کیلئے بھی تیارہوں، کشمیر کے حوالے سے وزیراعظم نے کہا مسئلہ کشمیرمذاکرات سےحل کرلیں، کشمیر کےلوگوں کی دلیری کوسلام پیش کرتاہوں، وہ لوگ اپنےحقوق کیلئے کھڑے ہیں، بھارت میں الیکشن ہیں آئندہ30 دن دھیان رکھنا پڑےگا، بھارت کی طرف سےکوئی کارروائی نہ کی جائےآپ نےچوکنارہناہے اور پاکستانیوں کو اپنی حفاظت کیلئےتیار رہناہے، عمران خان کا کہنا تھا کہ باجوڑمیں انٹرنیٹ آناچاہئے، باجوڑکانوجوان شعوررکھتاہے، پہلی کوشش باجوڑمیں انٹرنیٹ پہنچانےکی کریں گے،قبائلی علاقوں میں جنگ کی وجہ سےتباہی ہوئی، اسلام آبادپہنچتےہی باجوڑمیں انٹرنیٹ پہنچانےکی کوشش کروں گا، انھوں نے مزید کہا این ایف سی ایوارڈ سے سارے صوبے اپنے حصے سے 3فیصد قبائلی عوام کودیں گے، پنجاب،کےپی میں ہماری حکومت ہے، بلوچستان، سندھ کو کہناچاہتاہوں آپ کوبھی3فیصدفنڈدیناچاہئے، قبائلی علاقےکےلوگوں نےپاکستان کیلئےقربانیاں دیں،وزیراعظم کا کہنا تھا بحیثیت مسلمان ہمارافرض ہےپیچھےرہ جانےوالوں کی مددکریں، ویسٹ جرمنی نےایسٹ جرمنی کوپیسہ دیاوہ کرسکتےہیں توہم کیوں نہیں، کیا پوری قوم اپنےقبائلی عوام کو اوپر اٹھانے کیلئے 3 فیصدنہیں دےسکتی؟ ہم نےقبائلی علاقوں کونہ اٹھایاتودشمن انہیں ملک کےخلاف اکسانے اور انتشارپھیلانے کی کوشش کرینگے، عمران خان نے کہا خدانخواستہ قبائلی علاقوں میں دوبارہ آپریشن کرناپڑاتو3فیصدسےبھی بہت زیادہ کرچ کرناپڑےگا۔
The post آئندہ 30 دن بہت اہم ہیں ۔۔۔۔ وزیراعظم عمران خان نے اچانک پوری قوم کو خبردارکردیا appeared first on Urdu News.